خلیجی خبریںمتحدہ عرب امارات

دس ہزار 10،000 درہم جرمانہ ہوگا اب ، مالک کی اجازت کے بغیر گاڑی چلانے پر ایک سال قید و جرمانہ۔

خلیج اردو: متحدہ عرب امارات میں مالک کی اجازت کے بغیر گاڑی چلانا ایک موٹرسوار کو مشکل میں ڈال سکتا ہے۔ پبلک پراسیکیوشن نے عوام کو بتایا ہے کہ یہ ملکی قوانین کے مطابق قابل سزا جرم ہے۔

سرکاری ٹویٹ میں پبلک پراسیکیوشن نے کہا کہ پینل کوڈ کے آرٹیکل 394 کے مطابق ، جو بھی مالک کی اجازت یا منظوری کے بغیر گاڑی یا سکوٹر چلاتا ہے ، اسے ایک سال سے زیادہ اور/یا 10،000 درہم تک جرمانے کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

اس سے قبل پبلک پراسیکیوشن نے عوام کو یاد دہانی کرائی تھی کہ وہ سڑک پر کوئی بھی موٹر گاڑی نہ چلائیں جب تک کہ ان کے پاس حکام کی جانب سے جاری کردہ درست لائسنس نہ ہو۔ اگر کوئی ایسا کرتا پایا گیا تو اسے 50 ہزار درہم تک جرمانہ اور/یا تین ماہ تک قید کی سزا ہو سکتی ہے۔

متعلقہ مضامین / خبریں

متعلقہ مضامین / خبریں

Back to top button