متحدہ عرب امارات

اپنے مرحوم دوست کے خاندان پر مقدمہ درج کرنے والا شخص جس کو جرمانے کی رقم اب جائیداد بیچ کر دیا جائے گا

خلیج اردو
ابوظبہی : ابوظہبی کے ایک رہائشی نے اپنے مرحوم دوست کے ورثاء کے خلاف مقدمہ دائر کیا ہے جنہوں نے اسے 150,000 درہم کا ایسا چیک جاری کیا جو باؤنس ہو ا۔

ایک عدالتی فیصلے کے مطابق متائثرہ شخص کو خاندان کی طرف سے وراثت میں ملنے والی جائیداد سے جمع ہونے والی رقم سے ادائیگی کی جائے گی۔

سرکاری عدالتی دستاویزات میں بتایا گیا ہے کہ عرب مدعی نے اپنے دوست کو 150,000 درہم قرض دیا تھا جس نے بعد میں اسے ادائیگی کے طور پر ایک چیک جاری کیا اور جب شکایت کنندہ چیک لے کر بینک گیا تو اسے بتایا گیا کہ اکاؤنٹ میں ناکافی بیلنس ہے۔

شکایت کنندہ نے بتایا کہ کچھ دنوں بعد اسے خبر ملی کہ اس کا دوست فوت ہوگیا ہے جس کے بعد وہ آخری رسومات مکمل ہونے کا انتظار کرتے رہے۔

متعلقہ مضامین / خبریں

جب متائثرہ شخص ان کے خاندان کے پاس گیا اور دھوکہ دہی ہم اہل خانہ نے اسے رقم دینے سے انکار کر دیا جس کی وجہ سے اس نے اہل خانہ کے خلاف مقدمہ درج کرایا۔

شکایت کنندہ نے عدالت میں باؤنس ہونے والے چیک کی ایک کاپی اور بینک کی جانب سے ایک خط میں ظاہر کیا تھا کہ مدعا علیہ کے اکاؤنٹ میں ناکافی رقم موجود ہے۔

خاندان کے وکیل نے چیک کی درستگی کو چیلنج کرتے ہوئے دعویٰ کیا کہ اس پر دو دستخط جعلی ہو سکتے ہیں۔ تاہم فورانزک ماہر کی رپورٹ نے تصدیق کی کہ چیک اصلی تھا اور مرحوم دوست نے مرنے سے پہلے چیک پر دستخط کیے تھے۔

ابوظہبی فیملی اور دیوانی اور انتظامی دعووں کی عدالت نے فریقین کے دلائل سننے کے بعد ایک حکم جاری کیا جس میں مدعا علیہان کو حکم دیا گیا کہ وہ متوفی کی جائیدادوں سے جمع کی گئی نقد رقم سے شکایت کنندہ کو 150,000 ادا کریں۔

Source: LKhaleej Times

متعلقہ مضامین / خبریں

Back to top button